ابھی سورج نہیں ڈوبا ذرا سی شام ہونے دو
میں خود ہی لوٹ جاؤں گا مجھے ناکام ہونے دو
مجھے بدنام کرنے کے بہانے ڈھونڈتے ہو کیوں
میں خود ہو جاؤں گا بدنام پہلے نام ہونے دو
ابھی مجھ کو نہیں کرنا ہے اعترافِ شکست
میں سب تسلیم کر لوں گا یہ چرچا عام ہونے دو
میری ہستی نہیں انمول پھر بھی بِک نہیں سکتا
وفائیں بیچ لینا پر ذرا نیلام ہونے دو
نئے آغاز میں ہی حوصلہ کیوں توڑ بیٹھے ہو
تم سب کچھ جیت جاؤ گے ذرا انجام ہونے دو
poetry in urdu facebook, poetry in urdu dailymotion, poetry in urdu facebook 2015, poetry in urdu download, sad poetry in urdu, romantic poetry in urdu, ghalib poetry in urdu, parveen shakir poetry in urdu

Post a Comment Blogger

 
Top