آج کی بات پھر نہیں ہو گی
یہ ملاقات پھر نہیں ہو گی
ایسے بادل تو پھر بھی آئیں گے
ایسی برسات پھر نہیں ہو گی
رات انکو بھی یوں ہوا محسوس
جیسے یہ رات پھر نہیں ہو گی
اک نظر مڑ کے دیکھنے والے
کیا یہ خیرات پھر نہیں ہو گی
Ya Mulaqaat Phir Nhi Ho Gi - Alwida sMs, Dukhi Poetry

Post a Comment Blogger

 
Top