کبھی خاموش بیٹھو گے کبھی کچھ گُنگناؤ گے
میں اُتنا یاد آوں گا مجھے جتنا بُھلاؤ گے
کوئی جب پوچھ بیٹھے گا خاموشی کا سبب تم سے
بہت سمجھانا چاھو گے مگر سمجھا نہ پاؤ گے
کبھی دُنیا مُکمل بن کے آئے گی نگاھوں میں
 کبھی میری کمی دُنیا کی ھر شئے میں پاوُ گے
 کہیں بھی رہیں ھم تم محبت پھر محبت ھے
 تمہیں ھم یاد آئیں گے، ہمیں تم یاد آو گے

Post a Comment Blogger

 
Top